وزیراعظم شہباز شریف کا عالمی ڈونرز کانفرنس سے خطاب

تفصیلات کے مطابق سیلاب متاثرین کی بحالی کے لیے جنیوا میں عالمی ڈونرز سے خطاب کرتے ہوئے وزیراعظم شہبازشریف نے کہا کہ کانفرنس میں شریک تمام ممالک کا شکرگزار ہوں۔  پاکستان کی عوام انتونیو گوتریس کے تعاون کو ہمیشہ یاد رکھیں گے۔ انتونیو گوتریس کے ساتھ دس ستمبر کو سندھ کے متاثرہ علاقوں کا دورہ کیا۔وزیراعظم شہباز شریف نے کہا کہ پاکستان اس وقت تاریخی نہج پر کھڑا ہے۔ سیلاب سے پاکستان کو مالی اور جانی نقصان ہوا اور ریلیف کا کام ابھی ختم نہیں ہوا۔ متاثرین کی بحالی، تعمیرنوکیلئے بڑے پیمانےپر امداد کی ضرورت ہے۔ متاثرین کی بحالی کیلئےکم ازکم 16.3 ارب ڈالر کی ضرورت ہے۔ انھوں نے عالمی ڈونرز کانفرس سے خطاب میں مذید کہا کہ سیلاب نے نوے لاکھ لاگوں کو غربت کی لکیر سے نیچے دکھیل دیا۔ سیلاب سے مکانات، تعلیمی ادارے، زراعت کو نقصان پہنچا ہے۔ اقوام متحدہ کے سیکریٹری جنرل  انتونیو گوتریس کا کہنا تھا کہ پاکستان قدرتی آفات کے ساتھ کرپٹ عالمی معاشی سسٹم کا شکارہے۔ اس حوالے سے وزیرخارجہ بلاول بھٹو نے خطاب کرتے ہوئے کہا کہ سیلاب متاثرین کی بحالی کا آدھا کام پاکستان اپنے وسائل سے کرے گا۔

 

 

Leave A Reply

Your email address will not be published.

ٹول بار پر جائیں