سندھ میں 4 سال سے تنخواہیں لینے والے گھوسٹ اساتذہ برطرف

تفصیلات کے مطابق محکمہ تعلیم سندھ نے بڑی کارروائی کرتے ہوئے 19 گھوسٹ اساتذہ کو نوکریوں سے برطرف کردیا، ڈائریکٹر پرائمری ایجوکیشن لاڑکانہ نے برطرفیوں کا نوٹیفکیشن جاری کر دیا۔ ڈائریکٹر پرائمری ایجوکیشن کا کہنا ہے کہ برطرف 19 اساتذہ کا تعلق ضلع شکار پور سے ہے، کارروائیاں وزیر تعلیم سردار شاہ کی ہدایات پر کی گئیں۔ڈائریکٹر کے مطابق برطرف اساتذہ 2018 سے گھر بیٹھے تنخواہیں لے رہے تھے۔انہوں نے مزید کہا کہ ڈویژن میں مزید انکوائری چل رہی ہے، گھوسٹ ملازمین کے خلاف مزید کارروائیاں کی جائیں گی۔

 

Leave A Reply

Your email address will not be published.

ٹول بار پر جائیں